Poetry in Urdu | love poetry in Urdu

شاعری کیا ہے؟ کیا ہم حقیقی معنوں میں شاعری کرتے ہیں؟ شاعری کو اپنے قلم کے ذریعے اپنے خیالات اور احساسات کے اظہار کا طریقہ کہا جاتا ہے۔ آپ زندگی کے مختلف موضوعات پر جو سیاسی، سماجی یا کوئی اور ہو سکتے ہیں، اپنے تاثرات اور سوچ کا اظہار کرنے کے لیے اپنے اندر کی طاقت کو فعال کر رہے ہیں۔ ہمیں اردو شاعری کے بہت سے شائقین مل سکتے ہیں۔ کون کون ان کو فالو کرتا ہے، سوشل میڈیا پر شیئر کریں اردو کی بہترین شاعری؟
شاعری، لفظ شاعری یونانی لفظ 'Poiesis' سے ماخوذ ہے جس کا مطلب ہے 'بنانا۔' شاعری تال میں ہے۔ شاعری ادب کی شکل میں ہوتی ہے، جو کسی بھی موضوع سے متعلق جذبات، احساسات کے اظہار کے لیے استعمال ہوتی ہے۔ یہ سماجی، سیاسی، یا شاید کسی آس پاس کی چیز پر ہو سکتا ہے۔ شاعر کسی بھی مسئلے پر اپنی رائے کا اظہار کرتے ہیں۔ شاعری انسانوں پر بھی ہو سکتی ہے، جیسے دوست، شوہر، بیوی، گرل فرینڈ اور بوائے فرینڈ۔


اردو شاعری، جسے اردو شایری کہا جاتا ہے، شاعری کی ایک بھرپور روایت ہے، اور اس کی بہت سی مختلف شکلیں بھی ہیں۔ آج کل شاعری جنوبی ایشیا کی ثقافت اور روایت کا لازمی حصہ بن چکی ہے۔

Poetry in Urdu | love poetry in Urdu | love poetry | deep urdu poetry | 2 line poetry in urdu | urdu 2 line poetry | sad poetry in urdu 2 lines | friendship poetry | friendship poetry in urdu | breakup poetry |

دل سکون ~ چاہتا ہے

جو تیرے سوا ممکن نہیں

لوگ کہتے ہیں کے مسکان ہے ہونٹوں پہ میرے

کون جانے کے تصور میں ہنسایا کس نے

مانا کہ جلد باز بہت ہوں پر یقین جانو

تمہارے خواب تسلی سے دیکھتا ہوں میں

دے‪ ‬کوئی‪ ‬طبیب‪ ‬آ‪ ‬کے‪، ‬ہمیں‪ ‬ایسی‪ ‬دوا‪ ‬بھی

لذت‪ ‬بھی‪ ‬رہے‪ ‬درد‪ ‬کی‪ ، ‬مل‪ ‬جائے‪ ‬شفا‪ ‬بھی

تجھے دیکھنے کے سو بہانے تھے

ہائے وہ زمانے بھی کیا زمانے تھے

ہے عکس تیرا میسر جس سمت بھی دیکھوں

کیا ہر کوئ تم سا ہے، یا سارا جہاں تم ہو

اپنے انجام سے واقف ہوں مگر کیا کروں

مجھے اِک شَخص نے دیوانہ بنا رکھا ہے

تیرے ﺩﯾﺪﺍﺭ ﭘﮧ ﺟﻮ ﻣﯿﺮﺍ ﺍﺧﺘﯿﺎﺭ ﮨﻮﺗﺎ

یہ ﺭﻭﺯ ﺭﻭﺯ ﮨﻮﺗﺎ ، یہ ﺑﺎﺭ ﺑﺎﺭ ﮨﻮﺗﺎ

مجھ کو فرصت ہی کہاں موسم سہانا دیکھوں

میں تیری زات سے نکلوں تو زمانہ دیکھوں

رکی ہوئی تهی میری سانس میرے سینے میں

اسے گلے نہ لگاتا تو گهٹ کہ مر جاتا

طَلب مَوت کی کرنا گُناہِ کبِیرہ ہے

مَرنے کا شَوق ہے تو عِشق کِیوں نہیں کرتے

ہاتھ تھاما ہے تو مجھ پر بھروسہ بھی رکھنا

ڈوب جاؤں گا تمہیں ڈوبنے نہیں دوں گا

بڑی گستاخیاں کرنے لگا ہے میرا دل مجھ سے

یه جب سے تیرا ھوا هے میری سنتا ھی نهیں

میں نے اک عرصے سے تجھے ورد میں رکھا ہے

میرے ہونٹوں پہ تیرے نام کے چھالے ہیں

اب خوشی دے کر آزما مجھے

ان غموں سے میں نہیں مرتا

ہوش اتنا بحال رہتا ہے

صرف تیرا خیال رہتا ہے

نبھا سکو تو چلنا محبت کی راہ پر

ورنہ کسی کی زندگی برباد مت کرنا

کمال کا پیر ہے عشق

چھوڑ دیتا ہے مرید کرکے

خوف سے یوں نہ آنکھیں بند کرو

چومنے سے کوئی نہیں مرتا

محبت جب جب ہوگ

ییاد رکھناتم سے ہی ہوگی، ہر بار ہوگیبار بار ہوگی

ہم سے ایسی محبت نہ کر

آنہ جائے خلل تیرے ایمان میں

Leave a Comment