Sad poetry and deep powerful poetry of John Elia

John Elia Poetry, John Elia Poetry in Urdu, John Elia Sad Shayari, John Elia 2 Lines Poetry

تم کو جہانِ شوق و تمنا میں کیا ملا

 ہم بھی ملے تو درہم برہم ملے تمہیں 


Tum Ko Jahan e Shok o Tamanah Ma Kiya Mila 

Hum Bhe Mile Tu Darhm Barhm Mile Tumhain

JAUN ELIYA Best Top Famous Poetry

ہماری ہی تمنا کیوں کرو تم 
تمہاری ہی تمنا کیوں کریں ہم 

Humari Hi Tamanah Kion Karo Tum 
Tum hari Hi Tamanah Kion Kare Hum 

تری بانہوں سے ہجرت کرنے والے
نئے ماحول میں گھبرا رہے ہیں

Teri Bahoon Se Hijrat Karne Wale
Naye Mahool Ma Gabra Rahe Hain

JON EliA Famous Shayari

تیری خلوت سے میں اس بار نہ واپس آؤں 
تو مجھے دل میں ہی دکھ لیجیو جاناں اب کے 

Teri Khalwat Se Ma IS Bar Na Wapis Aon 
Tu Mughe Dil Ma Hi Rekh Lijijeo Ab Ke 

ہاں یہ جہاں نہیں دل و دانش کا ہاں نہیں 
اب اس جہاں کو زیر و زبر چاہتا ہے دل 

Han Yeah Jahan Nahi Dil o Danish Ka Han Nahi
Ab Is Jahan Ko Zir o Zabar Chahata Hai Dil

Sad poetry and deep powerful poetry of John Elia

Heart touching John Elia Sad Poetry

تو مجھ کو مجھ سے روک رہا ہے کمال ہے 
منظر تو رک کے دیکھ لوں اپنے زوال کا 

Tu Mugh Ko Mugh Se Rok Raha Hai Kamal Hai
Manzar Tu Ruk Ke Dekh Lon Apne Zawal Ka 

پھر گوارا ہے مجھے عشق کی ہر اک مشکل 
تازہ پھر شیوہء فریاد کیا ہے میں نے 

Phir Gawara Hai Mughe Ishq Ki Har Ek Mushkil
Taza Phir Shiwa e Faryad Kiya Hai Ma Na 

john elia 2 lines Famous Quotes poetry sms

ویسے میں ہوش میں ہوں پر مجھ کو غمگسار 
تم ہوش میں نہ لاؤ جب چارہ گر نہ آیا 

Wase Ma Hosh Ma Hun Par Mugh Ko Ghumgusar 
Tum Hosh Ma Na Lao Jab Chara Gar Na Aya 

زلف کو اس کی بھلا مجھ سے شکایت کیوں ہے 
جو پریشاں تھا اسے میں نے پریشاں لکھا 

Zulf Ko Uski Mughe Mugh Se Shikayat Kion Hai
Jo Pareshan Tha Usse Ma Na Pareshan Likha 

پوچھ نہ وصل کا حسابِ حال ہے اب بہت خراب 
رشتہ جسم و جاں کے بیچ جسم حرام ہو گیا

Poch Na Wusal Ka Hisab e Haal Hai Ab Bahut Kharab 
Rista Jism o Jaan Ke Beach Jism Haram Ho Gaya 

John EliaTop love poetry In Urdu

بھلا معلوم کیا ہوگا اسے اس کی جدائی میں 
ہمیں خود اپنے شکووں سے شکایت ہو گئی آخر 

Bhalah Maloom Kiya Ho Ga Usse Uski Judai Ma 
Humain Khud Apne Shakoon Se Shikayat Ho Gayi Akhir 

میں تم کو بھول جاؤں بھولنے کا دکھ نہ بھولوں گا
نہیں ہے کھیل یہ آسان میرا جی نہیں لگتا 

Ma Tum Ko Bhool Jaon Bholne Ka Dukh Na Bholo Ga 
Nahi Hai Khail Yeah Asman Mera Je Nahi Lagta 

جہاں ملتے تھے ہم تم اور جہاں مل کر بچھڑے تھے 
نہ وہ در ہے نہ وہ دلان میرا جی نہیں لگتا 

Jahan Milte The Hum Tum Aur Jahan Mil Kar Bechare The
Na Woh Dar Hai Na Woh Dalan Mera Ji Nahi Lagta 

نظر حیران دل ویران میرا جی نہیں لگتا 
بچھڑ کے تم سے میری جان میرا جی نہیں لگتا

Nazar Heran Dil Wehran Mera Je Nahi Lagta 
Bechar Ke Tum Se Meri Jaan Mera Je Nahi Lagta

jaun elia 2 line Heart Broken shayari

یہ وقت کے صحرا میں بھٹکتے ہوئے راہی 
منزل پہچلے آئے ہیں منزل کے نہیں ہیں 

Yeah Wqat Ke Sehra Ma Bhatakte Howe Rahi 
Manzal Pe Chale Aye Hain Manzal Ke Nahi Hain


حالت کی بے ترکیبی نےدل کو کہیں کا بھی نہ رکھا 
دل میں ہنسنا لب پر رونا الجھے اور الجھا بیٹھے 

Halat Ki Be Tarkibi Ne Dil Ko Kahin Ka Bhe Na Rekha 
Dil Ma Hansnah Lab Pe Rona Uljhe Aur uljha Baithe 

یہی شاید وہ منزل ہے جہاں دل خون ہو جائے 
کہ اشک امڈے ہوئے ہیں اور داماں سے لڑائی ہے 

Yeahi Shayad Woh Manzal Hai Jahan Dil Khoon Ho Jaye 
Ke Ashk Umde Howe Hain Aur Damaan Se Larai Hai

کیا وہ گماں نہیں رہا ہاں وہ گماں نہیں رہا 
کیا وہ امید بھی گئی ہاں وہ امید بھی گئی 

Kiya Woh Guman Nahi Raha Han Woh Guman Nahi Raha 
Kiya Woh Umeed Bhe Gayi Han Woh Umeed Bhe Gay

John Elia best Poetry In Urdu Copy Paste

کیسے کہیں کہ تجھ کو بھی ہم سے ہے واسطہ کوئی 
تو نے تو ہم سے آج تک کوئی گلہ نہیں کیا 

Kase kahin Ke Tugh Ko Bhe Hum Se Hai Wastah Koi 
Tu Na Tu Hum Se Ajj Tak Koi Gilah Nahi Kiya 

کیا تکلف کریں یہ کہنے میں 
جو بھی خوش ہے ہم اس سے جلتے ہیں 

Kiya Takuluf Karain Kehne Ma 
Jo Bhe khush Hain Hum Se Jalte Hain

اس کی امید ناز کا ہم سے یہ مان تھا کہ آپ 
عمر گزار دیجیے عمر گرار دی گئی 

Us Ki Umeed e Naaz Ka Hum Se Yeah maan Tha Ke App
Umer Guzar Dejiye Umer Guzar De Gayi


مجھ سے بچھڑ کر بھی وہ لڑکی کتنی خوش خوش رہتی ہے
اس لڑکی نے مجھ سے بچھڑ کر مر جانے کی ٹھانی تھی 

Mugh Se Bechar kar Bhe Woh Larki Kitni Khush Khush Rehti Hai
Us Larki Na Mugh Se Bechar Kar Mar Jane Ki Thani Thi

john elia bewafa dohka poetry

اج بہت دن بعد اپنے کمرے تک آ نکلا تھا 
جوں ہی دروازہ کھولا ہے اس کی خوشبو آئی ہے 

Ajj Bahut Din Baad Apne kamre Tak Aa Nikla Tha 
Jo Hi Darwazah Khola Hai Uski Khuhbo Ayi Hai

ہم نہ جیتے ہیں اور نہ مرتے ہیں 
درد بھیجو نہ تم دوا بھیجو 

Hum Na Jete Hain Aur Na Marte Hain
Dard Bhejo Na Tum Dawa Bhejo

میں تمہارے ہی دم سے زندہ ہوں
مر ہی جاؤں جو تم سے فرصت ملے 

Ma Tumhare Hi Dam Se Zinda Hun
Mar Hi Jaon Jo Tum Se Fursat Ho

Romantic Poetry

Top Nafrat Poetry Shayari

Some Videos

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *